نیول چیف کی زیرصدارت بحریہ یونیورسٹی بورڈ آف گورنرز کا اجلاس

چیف آف دی نیول اسٹاف ایڈمرل ظفر محمود عباسی نے بحریہ یونیوسٹی بورڈ آف گورنرز کے 42 ویں اجلاس کی صدارت کی۔

اجلاس میں یونیورسٹی میں جاری مختلف ترقیاتی کاموں خصوصاََ تعلیمی شعبہ جات اور انفرا سٹرکچر سے متعلق تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

چیف آف دی نیول اسٹاف جو بحریہ یونیورسٹی کے پرو چانسلر اور بورڈ آف گورنرز کے چیئرمین بھی ہیں نے بحریہ یونیورسٹی کی موثر اور تخلیقی صلاحیتوں کو بروئے کار لاتے ہوئے طلباءکی صلاحیتیں بڑھانے کے اقدامات کو سراہا۔

اجلاس کے آغاز سے قبل ایڈمرل ظفر محمود عباسی نے یونیورسٹی میں نئی تعلیمی سہولتوں کا بھی افتتاح کیا، جن میں اکیڈمک بلاک، بحریہ یونیورسٹی انوویشن سینٹر اور چائینیز لینگویج لیب شامل ہیں۔

انھوں نے بحریہ یونیورسٹی کی جدید تقاضوں کو مد نظر رکھتے ہوئے اعلیٰ تعلیم کی فراہمی پر تعریف کی۔ بحریہ یونیورسٹی میں قائم انوویشن سینٹر کا مقصد نئے اسٹارٹ اپس، درمیانے درجے کے کاروبار کے فروغ کے لیے مدد فراہم کرنااور کاروباری تحقیق کو فروغ دینا ہے۔

یونیورسٹی میں چینی زبان سیکھنے کے لیے جدید لیب بھی قائم کی گئی ہے جہاں طلباءکو ماہر چینی معلم کی زیر نگرانی چینی زبان سیکھنے کے مواقع میسر آ سکیں گے۔

پاکستان میں چین کے سفیر H.E. Yao Jingبھی اس موقع پر موجود تھے، چینی سفیر نے بحریہ یونیورسٹی کی جانب سے طلباءکو تعلیم کی معیاری و بہترین سہولتیں فراہم کرنے کی کاوشوں کو سراہا۔

بورڈ آف گورنرز اجلاس میں سینئر نیول آفیسرز، سیکر ٹری وزارت سائنس و ٹیکنالوجی، وزارت خزانہ کے فنانشل ایڈوائزر برائے پلاننگ، ریکٹر بحریہ یونیورسٹی اور یونیورسٹی کے دیگر اعلیٰ عہدیداران نے شرکت کی۔

Email This Post

آپ یہ بھی پسند کریں گے مصنف سے زیادہ

تبصرے بند ہیں.